10 بلین پاس ورڈ لیک، بڑا نقصان

فوربس کی رپورٹس کے مطابق سیکیورٹی محققین نے پاس ورڈ لیک کے سب سے بڑے ڈیٹا بیس سے متعلق انتباہ جاری کردیا ہے۔ گزشتہ ہفتے کے اختتام پر ہیکرز نے ایک معروف فورم پر تقریباً 10 بلین منفرد پاس ورڈز لیک کر دیئے ہیں۔ انہوں نے فورم پر، ڈیٹا بیس ’RockYou2024‘ کے نام سے ایک ٹیکسٹ فائل ہے، جس میں حیرت انگیز طور پر ساڑھے 9 بلین سے زائد منفرد پاس ورڈز عام زبان میں درج ہیں، پوسٹ کئے ہیں۔ سائبر نیوز ماہرین کے مطابق ، پاس ورڈز کی اتنی بڑی تعداد میں پاس ورڈز لا چوری ہونا ڈیٹا کی خلاف ورزیوں، مالی دھوکا دہی اور شناخت کی چوری کے کیسز میں اضافے کا سبب بن سکتا ہے۔ ماہرین کے مطابق لیک ہونے والا ڈیٹا بیس پرانے اور نئے ڈیٹا کی خلاف ورزیوں کا مرکب لگتا ہے۔ ان کے مطابق لیک ہونے والا ڈیٹا حقیقی دنیا کے پاس ورڈز کی ایک تالیف ہے، جو پوری دنیا کے افراد استعمال کرتے ہیں، جس کے سبب بیشتر صارفین کی معلومات خطرے میں ہے۔ ماہرین کے مطابق ایسے صارفین جو مختلف پلیٹ فارمز کے لیے ایک ہی قسم کے کریڈینشل اور پاس ورڈز استعمال کرتے ہیں ان کا ڈیٹا سب سے زیادہ خطرے میں ہے۔ ماہرین نے اس پیش نظر انٹرنیٹ صارفین کو اپنے پاس ورڈز تبدیل کرنے کی ہدایت جاری کر دی ہیں تاکہ ان کی معلومات محفوظ رہیں۔